Sunday, 30 November 2014

Doodh Wafir Tha Merey Dais K Bachon K Liye

Great Sad Poetry

دودھ وافر تھا میرے دیس کے بچوں کے لیۓ
آستینوں میں اگر سانپ نہ پالے جاتے

Saturday, 29 November 2014

Aab-E-Zam Zam Mein Agar Zehar Mila Sakta Hai


آبِ زم زم میں اگر زہر ملا سکتا ہے
موجِ نفرت میں کہیں تک بھی وہ جا سکتا ہے

کر کے وہ پھول سے بچّوں کو لہو میں لت پت
اُن کے ملبوس کی دستار بنا سکتا ہے

دے نہیں سکتا کسی طفل کو ٹافی لیکن
اُس پہ پستول کی گولی وہ چلا سکتا ہے

بم سکولوں پہ گراتا ہے وہ جن ہاتھوں سے
حیف! قرآں انہی ہاتھوں میں اٹھا سکتا ہے

اُس کے نزدیک مثالی وہی مومن ہے کہ جو
ٹکڑے جسموں کے مساجد میں اڑا سکتا ہے

اُس کی خصلت پہ یہ حیرت سے درندوں نے کہا
وَحش ایسا ' کسی انساں میں بھی آسکتا ہے

اُس کے سینے میں تو احساس کا جگنو بھی نہیں
وہ فقط جلتے چراغوں کو بجھا سکتا ہے

اُس کا یہ وہم ہے' بس وہم سراسر کہ کبھی
 ....پرچمِ عشق ہمارا وہ جھکا سکتا ہے

Friday, 28 November 2014

Bachay School Se Jannat Chaley Gaey


 مائیں دروازہ تکتی رہ گئیں
بچے اسکول سے جنت چلے گئے

Thursday, 27 November 2014

Hum December Ko Kis Liye Rotey

December Urdu Poetry

سرد لہجہ تھا پورے سال تِرا
ھم دسمبر کو کِس لیے روتے

Wednesday, 26 November 2014

Iss Dasht Se Aagay Bhi Koi Dsaht-e-Gumaan Hai

Best Love Poetry
  
اِس دشت سے آگے بھی کوئی دشتِ گماں ہے
لیکن یہ یقیں  کون  دلائے  گا  کہاں  ہے

یہ روح کسی اور علاقے کی مکیں ہے
یہ جسم کسی اور جزیرے کا مکاں ہے

کشتی کے مسافر پہ یونہی طاری نہیں خوف
ٹھہرا ہوا پانی کسی خطرے کا نشاں ہے

جو کچھ بھی یہاں ہےترے ہونے سے ہے ورنہ
منظر میں جو کھلتا ہے، وہ منظر میں کہاں ہے

اِس راکھ سے اٹھتی ہوئی ۔۔خوشبو نے بتایا
مرتے ہوئے لوگوں کی کہاں جائے اماں ہے

کرتاہے وہی کام جو کرنا نہیں ہوتا
جو بات میں کہتاہوں یہ دل سنتا کہاں ہے

یہ کارِ سخن کارِ عبث تو نہیں عامی
 ....یہ قافیہ پیمائی نہیں حسنِ بیاں ہے

Tuesday, 25 November 2014

Aisi Taisi Phullaan Di

Great Love SMS

سُرخی تیرے بُللاں دی 
ایسی تیسی پھلٌّاں دی 

Monday, 24 November 2014

Guzar Raha Hoon Magar Waqt K Iraday Se

Best Sad Poetry

گزر رہا ہوں مگر وقت کے ارادے سے
مرا وجود بندھا ہے ہوا کے دھاگے سے

کسے پکاروں بھلا کون چل کے آئے گا
یہاں پہ لوگ نظر آئے بھی تو آدھے سے

میں اِس جگہ سے کہیں اور جا نہیں سکتا
بندھا ہوا ہوں مکمل کسی کے وعدے سے

یہ چاند ٹوٹ کے قدموں میں کیوں نہیں گرتا
یہ کھینچتا ہے مجھے چاندنی کی دھاگے سے

تغیرات کی دنیا ترا قصور ہی کیا
....ترا وجود جو ممکن ہوا ارادے سے

Sunday, 23 November 2014

Sardiyon Ka Chaand Pagal Hogaya


ﮔﮭﻮﻣﺘﺎ ﭘﮭﺮﺗﺎ ﮨﮯ ﺗﻨﮩﺎ ﺭﺍﺕ ﮐﻮ
ﺳﺮﺩﯾﻮﮞ ﮐﺎ ﭼﺎﻧﺪ ﭘﺎﮔﻞ ﮨﻮ ﮔﯿﺎ

Saturday, 22 November 2014

Mein Ussay Apney Sabhi Aasaar De Kar Aagaya

Great Ghazals Collection

تیر ، نیزے ، ڈھال اور تلوار دے کر آگیا
اپنا سب کچھ ہی سپہ سالار دے کر آگیا

ہارنے کے خوف سے یہ فیصلہ کرنا پڑا
جنگ سے پہلے میں سب ہتھیار دے کر آگیا

عین ممکن ہے وہ میرا نام تک رہنے نہ دے
میں اُسے اپنے سبھی آثار دے کر آگیا

وقت نے دہرا دیا قصہ مرے اسلاف کا
اہل مکہ کو میں پھر گھر بار دے کر آگیا

اپنے حصے کی حکومت بھی اُسی کو سونپ دی
 ...میں ندیمؔ اُس کو بھرا دربار دے کر آگیا

Friday, 21 November 2014

Tum Samjhtey Ho Be-Zubaan Hein Hum

Great Lover Poetry

صبر تہذیب ہے محبت کی
تم سمجهتے ہو بے زبان ہیں ہم

Thursday, 20 November 2014

Kisi Pichhli Mohabbat Ko Dobara Kar Liya Jaey


Best Love Poetry

یونہی اس عشق میں اتنا گوارہ کر لیا جائے
کسی پچھلی محبت کو دوبارہ کر لیا جائے

شجر کی ٹہنیوں کے پاس آنے سے ذرا پہلے
دعا کی چھاؤں میں کچھ پل گزارہ کر لیا جائے

ہمارا مسئلہ ہے مشورے سے اب بہت آگے
کسی دن احتیاطاً استخار ہ کر لیا جائے

مرا مقصد یہاں رکنا نہیں بس اتنا سوچا ہے
سفر سے پیشتر اس کا نظارہ کر لیا جائے

حوالے کر کے اپنا جسم اک دن تیز لہروں کے
پھر اس کے بعد دریا سے کنارہ کر لیا جائے

ندیمؔ اس شہر میں مانوس گلیاں بھی بہت سی ہیں
....اور اب آئے ہیں تو ان کا نظارہ کر لیا جائے

Wednesday, 19 November 2014

Yaad Jab Daaira Banati Hai


ﻣﺠﮭﮑﻮ ﻣﺮﮐﺰ ﻣﯿﮟ ﺭﮨﻨﺎ ﭘﮍﺗﺎ ﮨﮯ
ﯾﺎﺩ ﺟﺐ ﺩﺍﺋﺮﮦ ﺑﻨﺎﺗﯽ ﮨﮯ

Tuesday, 18 November 2014

Tumhara Ishq Mera Aakhri Sahara Hai

Ishq Urdu Poetry

کبھی درخت کبھی جھیل کا کنارا ہے
یہ ہجر ہے کہ محبت کا استعارا ہے

تم آئو اور کسی روز اس کو لے جائو
بس ایک سانس ہے اِس پر بھی حق تمہارا ہے

خدائے عشق گلہ تجھ سے ہے جہاں سے نہیں
مرے لہو میں محبت کو کیوں اُتارا ہے

یہ سوچ لینا مجھے چھوڑنے سے پہلے تم
تمہارا عشق مرا آخری سہارا ہے

ابھی تو کھال اُدھڑنی ہے اِس تماشے میں
...ابھی دھمال میں جوگی نے سانس ہارا ہے

Monday, 17 November 2014

Ya Ta'alluq Na Nibh Saka Uss Se

Best Urdu Poetry

یا تعلق نہ نبھ سکا اس سے
یا طبیعت ہی بھر گئی ہو گی

Sunday, 16 November 2014

Tu Mujhse Piyar Kar Zara Tabdeel Kar Mujhe

Great Love Ghazals

ویران بہت ہوں ، وصل سے تشکیل کر مجھے
تو مجھ سے پیار کر ، ذرا تبدیل کر مجھے

صحرا کی تپتی ریت سے آکر مجھے بچا
تو ٹھنڈے میٹھے پانی کی جھیل کر مجھے

ہو جائیں نہ خراب کہیں میری عادتیں
ہر حکم پر نہ اس طرح تعمیل کر مجھے

اب اس طرح سے مجھ کو ادھورا نہ چھوڑ تو
...میں ہوں تیرا وعدہ ، تو اب تکمیل کر مجھے

Saturday, 15 November 2014

Jo Dil Se Hamara Ho Woh Ik Shakhs Kafi Hai



احباب کی لمبی قطاروں سے نہیں مطلب
جو دل سے ہمارا ہو وہ اک شخص کافی ہے

Friday, 14 November 2014

Khuwab Meri Aankhon Se Kaisa Kaisa Chheena Hai

Best Khuwab Ghazals

خواب میری آنکھوں سے کیسا کیسا چھینا ہے
مفلسی سے بڑھ کر بھی کیا کوئی کمینہ ہے

روشنی کے مدفن میں خوشبوؤں کی میّت ہے
آرزُو کے آنگن میں درد کی حسینہ ہے

نا مُراد راتیں ہیں، بے ہدف اُجالے ہیں
ذلّتوں کے دوزخ میں اور کتنا جینا ہے؟

ریزہ ریزہ خوابوں کی کرچیوں کو چُن چُن کر
زہر زندگی کا یہ قطرہ قطرہ پینا ہے

جانے کون ہوتے ہیں جو مُراد پاتے ہیں
اپنے واسطے تو یہ تیرھواں مہینہ ہے

جانے کس زمانے میں اُجرتیں بھی ملتی تھیں
اب تو محنتوں کا عوض خُون اور پسینہ ہے

زر پرست بستی کی کیا حسیں ثقافت ہے
ہونٹ مسکراتے ہیں پر دلوں میں کِینہ ہے

خوف کے سمندر میں اضطراب کی موجیں
جن پہ بے یقینی کا، ڈولتا سفینہ ہے

روز اک اذیّت کے دشت سے گزرتا ہوں
نارسی کے تِیروں سے چھلنی میرا سِینہ ہے

کرب کے الاؤ میں شعلہ شعلہ جلتا ہوں
وحشتوں کی سنگت میں لمحہ لمحہ جینا ہے

شامِ زندگی سر پہ آ کھڑی ہے اور خود کو
....ریزہ ریزہ چُننا ہے، لخت لخت سِینا ہے

Thursday, 13 November 2014

Terey Khayal Mein Jab Be-Khayal Hota Hoon

Best Love Poetry

تیرے خیال میں جب بے خیال ہوتا ہوں
زرا سی دیر سہی ! لازوال ہوتا ہوں

Wednesday, 12 November 2014

Chaley Aana Merey Ho Kar Mein Maazi Phir Bhula Doon Ga


جفا کی آگ تھم جاۓ ,فخر ٹوٹے کبھی محسن
چلے آنا میرے ھو کر میں ماضی پھر بھلا دوں گا

Tuesday, 11 November 2014

Kis Takalluf Se Hamein Zair-e-Amaan Rakha Gaya

Sad Ghazals Collection

کس تکلُّف سے ہمیں زیر ِ اماں رکّھا گیا
آہنی پنجرے میں اپنا آشیاں رکّھا گیا

ایک ہی زنجیر تھی ' اِس پار سے اُس پار تک
کَج رَوی کا کوئی وقفہ ہی کہاں رکّھا گیا

اب تو ہم آپس میں بھی مِلتے نہیں ' کُھلتے نہیں
کس بَلا کا خوف اپنے درمیاں رکّھا گیا

اُس کنارے کوئی اپنا منتظِر ہو ' یا نہ ہو
یہ بھی کیا کم ہے کہ اِتنا خوش گُماں رکّھا گیا

یُوسُف اِک خوشبُو بھرے پَل کی رفاقت پر ہمیں
...کتنی ویراں ساعتوں میں رایگاں رکّھا گیا

Monday, 10 November 2014

Woh Mujhe Bhool He Gaya Hoga

Best Yaad Poetry

وہ مجھے بھول ہی گیا ہو گا
اتنی مدت کوئی خفا نہیں رہتا

Sunday, 9 November 2014

Khushboo Ki Tarha Dil K Gulaabo Mein Rahey Ga

Best Love Ghazals

خوشبو کی طرح دل کے گلابوں میں رہے گا
وہ چاند ہمیشہ میرے خوابوں میں رہے گا

بھیگی ہوئی آنکھوں سے گلے مل کے بچھڑنا
وہ شخص سدا دل کے نصابوں میں رہے گا

شاید میں ابھی اس کے جگر تک نہیں اترا
شاید وہ ابھی اور نقابوں میں رہے گا

سانسوں کی طرح میں، تیری نس نس میں رہوں گا
کھو کر تُو مجھے خود بھی عذابوں میں رہے گا

نشہء تو تیرے قرب کا ہے جانِ تمنا
کیا لطف تیرے بعد شرابوں میں رہے گا

ہاں پیار ہے، ہاں پیار ہے، سولی پہ چڑھا دو
اقرار ہے، اقرار ہے، جوابوں میں رہے گا

پھر زرد رُتیں دل پہ اُترنے لگیں ایاز
 ...دل تب ہی بچے گا جو خرابوں میں رہے گا

Saturday, 8 November 2014

Ab Koi Aarzoo Nahi Hai Baaqi


اب کوئی آرزو نہیں ہے باقی
جستجو میری آخری تم تھے

Friday, 7 November 2014

Bohat Gehra Hai Apna Tajirana Piyar Apas Mein

Mohabbat Bhari Ghazlein

بہت گہرا ہے اپنا تاجرانہ پیار آپس میں
کہ ہم کرتے ہیں سمجھوتوں کا کاروبار آپس میں

کبھی ٹکرا بھی جاتے ہیں جو برتن ساتھ رہتے ہیں
ہماری ہو بھی جاتی ہے کبھی تکرار آپس میں

یہاں دو سوختہ دل بھی اکٹھے رہ نہیں پاتے
جڑے رہتے ہیں لیکن سینکڑوں کہسار آپس میں

بہت روئیں گے سناٹے ،یہ گھر جب چھوڑ جاؤ گے
بہت باتیں کریں گے یہ در و دیوار آپس میں

انا کو بیچ میں آئندہ ہم آنے نہیں دیں گے
یہ طے کر لیں کھلے دل سے چلو اک بار آپس میں

وہی نازک گھڑی ہوتی ہے ساجد پر زمانے کی
...جگہیں تبدیل جب کرتے ہیں پہرے دار آپس میں

Thursday, 6 November 2014

Aaj Itna Udaas Hoon Nasir

Urdu Sad Poetry

آج اتنا اداس ہوں ناصر
جیسے ذلفیں جوان بیوہ کی

Wednesday, 5 November 2014

Mein Iss Liye Aangan Ka Shajar Kaat Raha Tha


Sad Urdu Ghazals

میں اس لیے آنگن کا شجر کاٹ رہا تھا
 وہ حبس تھا کمروں میں کہ گھر کاٹ رہا تھا

لوگوں کو یہ خدشہ تھا کہ بنیاد غلط ہے
دیوار کو برسات کا ڈر کاٹ رہا تھا

کانٹوں سے نہیں آبلہ پائی کو شکایت
تلوئو ں کو تو بے فیض سفر کاٹ رہا تھا

ہر شخص مجھے صورتِ اخبار اٹھا کر
 صفحات سے مطلب کی خبر کاٹ رہا تھا

کہنے کو تو یوں میری انا قید تھی لیکن
دستار کو اندر سے ہی سرکاٹ رہا تھا

شہکا ر کا ثانی ہی نہ بن جائے کہیں اور
 ...اس خوف سے وہ دست ِ ہنر کاٹ رہا تھا

Tuesday, 4 November 2014

Musalsal Raabta Rakha Hua Hai

New SMS Collection

مسلسل رابطہ رکھا ہوا ہے
مگر اک فاصلہ رکھا ہوا ہے

Monday, 3 November 2014

Dil Ne Dil Ka Lagaao Daikha Hai

Best Love Poetry

آؤ دیکھا نہ تاؤ دیکھا ہے
دل نے دل کا لگاؤ دیکھا ہے

میری انکھوں نے ساری دنیا میں
حسن کا رکھ رکھاؤ دیکھا ہے

ہم نے ہر وقت نازنینوں سے
عشق کا چل چلاؤ دیکھا ہے

انتخابات مین رقیبوں کا
دھاندلی سے چناؤ دیکھا ہے

اپنی برگشتہ طالعی کے طفیل
...دل پہ غم کا پڑاؤ دیکھا ہے

Sunday, 2 November 2014

Muje Ik Baar Yousuf ki Tarha Neelaam Honey De

Best Urdu Poetry

پہنچ ہی جایئں گے پاؤں میرے بھی تخت شاہی تک
مجھے اک بار یوسف کی طرح نیلام ہونے دے

Saturday, 1 November 2014

Ab K Apney Honton Pay Khokhli Duaaein Hein

Best Sad Poetry

بے قرار سانسوں میں گونجتی صدائیں ہیں
اب کے اپنے ہونٹوں پہ کھوکھلی دعائیں ہیں

بے حِسی کے مارے ہیں اپنے شہر کہ سب لوگ
پاؤں سے زمیں، سر سے کھینچتے ردائیں ہیں

تیری چاہتوں نے کل خواب کچھ دکھائے تھے
آج اپنی نیندوں کو ڈھونڈتی نگاہیں ہیں

آگہی کے رستوں پر صرف زخم ملتے ہیں
اس پہ چلتے رہنے کی انگنت سزائیں ہیں

ہاں وہ پچھلے موسم تھے جن میں پھول کھلتے تھے
 ...........زہر اب فضاؤں میں گھولتی ہوائیں ہیں